Menu

Updates

What's Popular Year 2017-18

Books

English Books Urdu Books Arabic Books

Aalim Online

Question And Answer Session

GUIDELINES FOR HANDLING
(get your answers by islamic scholar)

    استاد محترم آیت الله تحریری کی خدمت میں ایک سوال
    راهِ عبودیت: گناہوں کے دلدل سے باہر کیسے نکلوں؟
    سوال :- میری عمر 23 سال ہے اور میں شادی شده ہوں- مولانا صاحب میں اپنے آپ سے تهک چکا ہوں- اگر میں اپنے سوالات کو بلا تکلف بیان کروں تو میری بے ادب گفتگو سے ناراض مت ہوئیے گا- ⚠اول: میں نے اپنی زندگی میں بے شمار گناه انجام دیے ہیں- شیطان کا غلام تها اور ہوں- خدا کو کهو چکا ہوں اور میری بنیادی مشکل یہی ہے کہ خدا کو بھول چکا ہوں- ابھرنے کیلئے جتنے ہاتھ پاؤں ماروں کوئی فائده نہیں بلکہ اسی میں اور غرق ہوتا چلا جا رہا ہوں- اپنے نفس کے ساتھ کیا کروں؟ مجھ سے یہ نہ کہئیے کہ نماز پڑهو- یہ سب مجهے معلوم ہے- مجهے بندگی کی راه دکھائیے- ایک روحانی طبیب کی مانند میرا علاج کیجیئے- آپ روح کے طبیب ہیں- یہ صحیح ہے کہ بندگی نماز پڑهنے اور اس جیسے عمل کا نام ہے- لیکن پہلے یہ فرمائیے کہ میں کس طرح اس دلدل سے باہر نکلوں؟ ⚠دوم: مجهے گندی وب سائٹیں دیکهنے کی بری عادت پڑ گئی ہے- اس سے کس طرح چھٹکارا پاؤں؟

    جواب:- عزیز برادر- ہم ہمیشہ الله تعالیٰ کی توجہ کے حامل ہیں- مہربان خدا کی جانب سے توبہ سے متعلق آیات ہم سب گناہگاروں کے لئے ہی ہیں- کیا آپ نے اس شخص کا واقعہ نہیں سنا جس نے رسول الله کے زمانے میں قبرستان جا کر ایک حسین مرده خاتون کے ساتھ بدفعلی کی؟ آخرکار نبی کے طفیل جب توبہ کی آیت نازل ہوئی تو اس کی بھی توبہ قبول کر لی گئی ۔ مسجد النبی میں ستونِ توبہ کے نام سے ایک ستون بهی ہے جو اسی شخص سے متعلق ہے- یاد رکهیں کہ پروردگار توبہ کرنے والے کو پسند کرتا ہے- 2⃣ برے اعمال کے برے نتیجے کی طرف توجہ رکهیں جو انسان کی دنیا کو بهی خراب کر دیتے ہیں اور آخرت کو بهی- مدت اور کیفیت کے اعتبار سے آخرت کی زندگی کا تو دنیا کی زندگی سے مقابلہ بهی نہیں کرسکتے- 3⃣ جتنا ہو سکے مسجد اور نصیحت والے دروس و محافل میں شرکت کریں کیونکہ یہ مقدس مکانات رحمتِ الہی کے نزول کی جگہ ہیں- اگر قبرستان جا سکیں تو جائیے اور موت کی فکر کریں- خدا کی رحمت سے مایوس نہ ہوں- اپنے ان کاموں کو ترک کرنے کا مصمّم اراده کریں- خدا اور اہل بیت سے بهی ہمیشہ مدد طلب کرتے رہیں- نیک اعمال بهی انجام دیں اور یہ نہ سوچیں کہ اس حالت میں نماز پڑهنے کا کیا فائده - ایسا نہیں ہے، بلاشبہ فائده ہے- اگر انسان اپنے لئے خود ہی کچھ کر لے اور دوسروں کی (مالی یا غیر مالی) مدد کرسکے تو بہت خوب ورنہ دوسرے حتی اپنے بیوی بچے بهی انسان کی فکر میں نہیں ہوتے-

      سوال: بڑی سے بڑی نوکری کرنا حلال ہے ؟
      جواب: اسلام میں حلال اور حرام معیار ہے اگر آپ حلال طریقے سے کما رہے ہیں تو چھوٹی سے چھوٹی اور بڑی سے بڑی نوکری حلال ہے۔ پیسے اگر حرام طریقے سے کما رہے ہیں تو چھوٹی سے چھوٹی اور بڑی سے بڑی نوکری حرام ہے سب سے بڑھ کر یہ کہ تنہائی میں اپنے دِل سے پُوچھیں کہ جو آپ کام کر رہے ہیں وہ جائز ہے یا نا جائز

        سوال: کیا قرآن میں ہا تھ کھول کر نماز پڑھنے کی طرف اشارہ ھے؟

                    Please Recite Surah e Fatiha For

                    Syed Wasi Haider Zaidi S/o Syed Hussain Ahmed Zaidi


                  • video on vimeo
                  • video on youtube
                  • facebook page